Mian Manzoor Ahmed Wattoo predicts the worst of load shedding is yet to come

wattoo-terms-military-courts-as-right-step-to-deal-with-terrorists-1420901440-6228
The people have not experienced the worst of load shedding of electricity yet which they will face within next few days as the furnace oil stocks will dwindle to exhaustion said Mian Manzoor Ahmed Wattoo, President Punjab PPP Central in a statement issued here today.

He said that the major cities of the country had been facing more than 16 hours load shedding and the rural area’s supply was dictated by the sporadic rule giving them the feelings of living in an era of pre-recorded history.

He said that the farmers were facing double jeopardy because their tube wells were lying idle affecting the irrigation of their landholdings and the good prospects of crops were almost nil.

He said that the present government was an embodiment of mismanagement, inaptness and above all lacked vision and therefore the people of this country were doomed and their hopes of good days had dashed during PML (N) government’s watch.

He said that the Chief Minister of Punjab used to boast to control load shedding of electricity within months while beating the heat with hand made fan at Minar-i- Pakistan adding it was more than one and half year now of their government but the crisis had assumed the horrendous proportion instead. It is the test of his sense of fairness and justice if he confesses his failure in public with full throated ease as he used to violently agitate the load shedding during the PPP government, he added.

He observed that he could not face the people because his duplicity had been exposed to the core suggesting that he could convenient mislead the people by uttering mendacious statements for the sake of his personal aggrandizement.

He said that his aimless goings and comings were analogous to running on the treadmill and getting to no where. Nothing was more ironical than wasting time and energy without a clear road map adding Punjab Chief Minister hurtfully represents the character perfectly.

میاں منظور احمد وٹو صدر پیپلز پارٹی سنٹرل پنجاب نے آج یہاں سے جاری ایک بیان میں خدشہ ظاہر کیا ہے کہ آئندہ کچھ دنوں میں بجلی کا بحران شدید ترین ہو جائیگا کیونکہ فرنس آئل حکومت کی بد انتظامی کی وجہ سے ختم ہونے کو ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت بھی بڑے شہروں میں بجلی کی تقریباً 12گھنٹوں سے زیادہ لوڈشیڈنگ کی جارہی ہے جبکہ دیہاتی علاقوں میں تو بجلی کبھی کبھار آنے سے پتھر کے زمانے کی یاد آتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسانوں کے ٹیوب ویلز بند ہونے کی وجہ سے آبپاشی بری طرح متاثر ہو رہی ہے جسکی وجہ سے آئندہ اچھی فصل کے امکانات مخدوش ہو گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت ، نا اہلی بد انتظامی کی ماہر ہونے کے علاوہ ویثرن سے بھی عاری ہے اس لیے لوگوں کی اس حکومت سے وابستہ اچھے دنوں کی تمام امیدیں دم توڑ گئی ہیں۔ انہوں نے یاد دلایا کہ پنجاب کے وزیر اعلیٰ بڑے فخر سے کہتے تھے کہ وہ سالوں میں نہیں بلکہ مہینوں میں بجلی کی لوڈشیڈنگ پر قابو پاکر دکھائیں گے اور وہ مینار پاکستان میں ہاتھ میں پنکھا لئے پیپلز پارٹی کی حکومت کے خلاف بجلی کی لوڈشیڈنگ کا احتجاج کرتے تھے۔ انہوں نے کہا کہ اب اس حکومت کو ڈیڑ ھ سال سے زیادہ عرصہ ہو گیا ہے لیکن بجلی کا عذاب شدید سے شدید ترین ہوتا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ انصاف کا تقاضا ہے کہ وزیر اعلیٰ اُسی جوش و جذبے سے آ کر عوام میں اپنی ناکامی کا اِس ضمن میں اعتراف کریں یہ انکی سچائی سے کمٹمنٹ کی آزمائش ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ اب وہ لوگوں کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہے کیونکہ انہوں نے ووٹوں کی خاطر عوام سے جھوٹ بولا جس سے اب حکمران بری طرح ایکسپوز ہو گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کی آنیاں جانیاں بالکل اُسی طرح ہیں جیسا کہ ٹریڈ مل پر ایک آدمی دوڑتا رہتا ہے لیکن وہ رہتا وہی پر ہی ہے۔ وزیراعلیٰ پنجاب ایسے کریکٹر کی مکمل شکل ہیں۔

کیٹاگری میں : News

اپنا تبصرہ بھیجیں