انتخابات مقررہ وقت پر اور شفاف ہونگے ‘ پیپلز پارٹی التواء کی سازشیں ناکام بنانے کے ساتھ ساتھ اس امر کو بھی یقینی بنائے گی کہ کوئی بھی غیر جمہوری قوت عوامی مینڈیٹ پر ڈاکہ نہ ڈال سکے۔ : میاں منظور وٹو

watto-jung

لاہور۔۔۔۔۔۔صدر پاکستان پیپلز پارٹی پنجاب اور وفاقی وزیر میاں منظور احمد وٹو نے کہا ہے کہ انتخابات مقررہ وقت پر اور شفاف ہونگے ‘ پیپلز پارٹی التواء کی سازشیں ناکام بنانے کے ساتھ ساتھ اس امر کو بھی یقینی بنائے گی کہ کوئی بھی غیر جمہوری قوت عوامی مینڈیٹ پر ڈاکہ نہ ڈال سکے۔

پیپلز سیکرٹریٹ سے جاری بیان میں انہوں نے کہا کہ عام انتخابات کے قریب بعض سیاسی جماعتوں کی جانب سے الیکشن کمیشن کی تحلیل ، بلا جواز دھرنوں اور صدر مملکت کے استعفے کا مطالبہ غیر جمہوری ، غیر آئینی اور غیر اصولی ہے ،، میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ بلا جواز دھرنوں کی بجائے ن لیگ کو چاہئے کہ وہ انتخابات کے بروقت منصفانہ انعقاد کے خلاف التوا کی سازشیں کرنے اور احتجاجی کالیں دینے والوں کی خبر لے اور ان کی سازشیں ناکام بنانے میں کردار ادا کرے۔
ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ آئی بی چیف مسعود شریف کی جانب سے کئے گئے انکشافات کہ محترمہ بینظیر بھٹو کے خلاف تحریک عدم اعتماد کے پیچھے سابق آرمی چیف اسلم بیگ اور سابق آئی ایس آئی چیف اسد درانی کا ہاتھ تھا کی غیر جانبدارانہ تحقیقات کرائی جائیں ۔ انہوں نے کہا کہ مسعود شریف نے یہ بھی انکشاف کیا کہ صدر اسحاق خان ، مرزا سلم بیگ اور اسد درانی محترمہ بینظیر بھٹو کو اقتدار اور سیاست سے بے دخل کرنا چاہتے تھے۔

میاں منظور وٹو نے کہا کہ اب یہ بات ثابت ہو چکی ہے کہ پیپلز پارٹی کی منتخب جمہوری حکومت اور عوامی مینڈیٹ کے خلاف ہمیشہ غیر جمہوری عناصر ہی سازشیں کرتے ہیں ، میاں منظور وٹو نے کہا کہ آزادانہ و منصفانہ انتخابات کو یقینی بنانے کے لئے پیپلز پارٹی نے اپوزیشن کے نامزد کردہ چیف الیکشن کمشنر کا تقرر کر کے کمیشن کو با اختیار بنایا اس کی تحلیل اور تشکیل نو کیلئے سامنے آنے والے بعض جماعتوں کے مطالبات غیر اصولی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ انتخابات سر پر ہیں ایسے میں کوئی نیا پنڈورا باکس کھولنا انتخابات ملتوی کرانے کی سازشیں ہیں ،، انہوں نے خبردار کیا کہ اگر انتخابات بروقت نہ ہوئے تو اس ملک و قوم کو بہت زیادہ نقصان پہنچنے کا احتمال ہے۔

میاں منطور وٹو نے کہا کہ تمام جمہوری قوتوں کو ان سازشوں کا مل کر مقابلہ کرنا اور عام انتخابات کے آزادانہ ، منصفانہ اور بروقت انعقاد کو یقینی بنانا چاہئے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں