پنجاب سے اٹھ کر دہشتگرد کوئٹہ، بلوچستان میں کارروائیاں کر رہے ہیں: میاں منظور وٹو

DSC_0464

پنجاب سے اٹھ کر دہشتگرد کوئٹہ، بلوچستان میں کارروائیاں کر رہے ہیں اور ان کو پنجاب حکومت تحفظ دے رہی ہے کیونکہ اس نے ان سے انتخابی اتحاد اور سیٹ ایڈجسٹمنٹ کر رکھی ہے ، دہشتگردی کے خلاف جو سوچ اور کاوش پی پی پی کی ہو سکتی ہے وہ کسی اور کی نہیں ہو سکتی۔پاکستان پیپلز پارٹی پنجاب کے صدرمیاں منظور احمد وٹو کی میڈیا سے گفتگو

لاہور۔25 فروری (اے پی پی)وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان اور پاکستان پیپلز پارٹی پنجاب کے صدرمیاں منظور احمد وٹو نے کہا ہے کہ پنجاب سے اٹھ کر دہشتگرد کوئٹہ، بلوچستان میں کارروائیاں کر رہے ہیں اور ان کو پنجاب حکومت تحفظ دے رہی ہے کیونکہ اس نے ان سے انتخابی اتحاد اور سیٹ ایڈجسٹمنٹ کر رکھی ہے۔وہ پیر کے روز گلبرگ میں مقتول ماہر چشم ڈاکٹر سید علی حیدر کی رہائش گاہ پر ان کے والد ڈاکٹر سید ظفر حیدر سے اظہار تعزیت کے بعد میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ دہشتگردوں کی کارروائیوں میں ملوث عناصر ملک کے دشمن ہیں جنہوں نے پاکستان کا تشخص برباد کر دیا اور وہ بیرونی ایجنڈا پر یہاں کام کر رہے ہیں۔منظور وٹو نے کہا کہ ڈاکٹر ظفر حیدر کے پاس صدر زرداری نے خصوصی طور پر مجھے بھیجا ہے کہ انکی طرف سے بھی دلی تعزیت کا اظہار کروں۔ صدر اس واقعہ پر بے حد رنجیدہ ہیں۔ یہ ایک بڑا سانحہ ہے۔ ملزموں کو گرفتار کرنے اور سزا دلوانے کیلئے ہرممکن کوشش کی جائیگی۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی دہشت گردی کے خاتمے کیلئے پرعزم ہے۔ دہشت گرد ہمیں کمزور کرنا چاہتے ہیں لیکن ہم انکا جرات سے مقابلہ کرینگے، اہل تشیع ہمارے بھائی ہیں اور ہم سے اچھے مسلمان ہیں۔ انکے خلاف دہشت گردی کی مذمت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب حکومت برائی کو روک نہیں سکتی تو برا تو کہے مگر یہ تو برے کو برا کہنے کو بھی تیار نہیں۔ رحمان ملک نے اسی لئے کہا ہے پنجاب حکومت کیونکہ دہشت گردوں کیخلاف کارروائی کیلئے تیار نہیں اسلئے وفاقی حکومت خود کارروائی کریگی۔ ڈاکٹر علی حیدر کے قتل کی ذمہ دار پنجاب حکومت ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب میں وزیراعلیٰ تھا تو امام بارگاہوں اور مساجد میں دھماکے ہورہے تھے، میں نے دہشت گردوں کو گرفتار کرکے جیل میں بھیجا۔ انہوں نے کہا کہ ہم کوشش کررہے ہیں کہ مزید کوئی سانحہ نہ ہو۔ الیکشن ہر حال میں ہونگے۔ انہوں نے کہا کہ میاں نوازشریف کا کہنا ہے ایم کیو ایم کی حکومت سے ناراضگی ڈرامہ ہے تو وہ بتائیں کیا ڈرامہ ہے؟ ایم کیو ایم پہلے بھی ناراض ہوئی تھی اور مان گئی تھی اور اب بھی امید ہے مان جائیگی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں