پنجاب میں حکمرانوں کی نا اہلی کے باعث جرائم کی شرح خوفناک حد تک بڑھ چکی ہے, جعلی پولیس مقابلوں پر چیف جسٹس فوری طور پر نوٹس لیں: راجہ عامر خان

IMG_4847

لاہور: سیکرٹری اطلاعات و نشریات راجہ عامر خان نے کہا ہے کہ پرامن پنجاب کا نعرہ لگانے والے بے نقاب ہو گئے ، پانچ سال میں جرائم بڑھے اور سینکڑوں بے گناہ جعلی پولیس مقابلوں میں مارے گئے ، میڈیا کی پنجاب کے پانچ سالہ جرائم رپورٹ پر تبصرہ کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جعلی پولیس مقابلوں پر چیف جسٹس آف پاکستان فوری طور پر نوٹس لیں – انہوں نے کہا کہ پنجاب میں حکمرانوں کی نا اہلی کے باعث جرائم کی شرح خوفناک حد تک بڑھ چکی ہے اور لاء اینڈ آرڈر کی صورتحال تشویشناک ہو گئی ہے – عوام میں عدم تحفظ کا احساس بڑھ رہاہے ، انہو ں نے کہا کہ پنجاب جیسے پر امن صوبے میں بدامنی اور جرائم بڑھنے کی ذمہ داری وزیر اعلی پنجاب کی نااہلی ، ناقص پالیسیاں ، سرکاری وسائل کی بے تحاشہ لوٹ مار اور بیڈ گورننس پر عائد ہوتی ہے ، میرٹ کو بری طرح نظر انداز کر کے جس طرح لوٹ کھسوٹ کا بازار گرم کیا گیا ، قانون نافذ کرنے کے ذمہ داراداروں کو جس طرح ذاتی اور سیاسی انتقام کے لئے استعمال کیا گیا ، رشوت اور اقرباء پروری کے ذریعے تقرریاں ، تعیناتیاں ، ترقیاں کی گئیں ، قبضہ گرپوں کی سرپرستی اور جرائم پیشہ عناصر کی حوصلہ افزائی کی گئی ، ان تمام اقدامات کا نتیجہ یہی نکلنا تھا کہ عوام عدم تحفظ کا شکار ہیں جبکہ جرائم پیشہ عناصر بے لگام اور جرائم حد سے بڑھ چکے ہیں – راجہ عامر خان نے کہا ہے کہ اصولی طور پر جرائم کی شرح میں خوفناک اضافے اور جعلی پولیس مقابلوں کی بھرمار کے ذمہ دار شہباز شریف ہیں اس لئے ان پر فی الفور فوجداری مقدمات قائم ہونے چاہئیں – انہوں نے کہا کہ پنجاب کے عوام سب کی اصلیت جان چکے ہیں اور ظالم حکمرانوں کا یوم حساب قریب ہے –

اپنا تبصرہ بھیجیں