ن لیگ جان بوجھ کر تاخیری حربے استعمال کر رہی ہے' جس کے باعث عوام میں اضطراب اور تشویش بڑھ رہی ہے: عزیز الرحمان چن اورراجہ عامر خان

58814_379405435499617_831792171_n

نائب صدر پاکستان پیپلز پارٹی پنجاب عزیز الرحمان چن اور سیکرٹری اطلاعات و نشریات راجہ عامر خان نے کہا ہے کہ ن لیگ جان بوجھ کر تاخیری حربے استعمال کر رہی ہے تاکہ عام انتخابات کے بروقت انعقاد میں دیر ہو سکے – میڈیا سے غیر رسمی بات چیت میں انہوں نے کہا کہ عام انتخابات کا شیڈول جاری ہو چکاہے – نگران وزیر اعظم اور سندھ ، بلوچستان ، خیبرپختونخوا کے نگران وزرائے اعلی اپنی ذمہ داریاں سنبھال چکے ہیں جبکہ سب سے بڑے صوبہ پنجاب میں ن لیگی قیادت کے تاخیری حربوں اور “میں نے مانوں ” کی پالیسی کے باعث تاحال کنفیوژن برقرار ہے ، جس کے باعث عوام میں اضطراب اور تشویش بڑھ رہی ہے – انہوں نے کہا کہ ن لیگی قیادت نے نگران وزیر اعظم کے چناؤ میں بھی یہی نامناسب ، غیر جمہوری اور طفلانہ رویہ اپنائے رکھا جس کے باعث نگران وزیر اعظم کا چناؤ باہمی افہام و تفہیم سے نہیں ہو سکا ، انہو ں نے کہا کہ ن لیگی قیادت کے غیر جمہوری طرز عمل اور مخالفت برائے مخالفت کی روش سے پارلیمانی کمیشن میں بھی نگران وزیر اعظم کا چناؤ نہیں ہو سکا اور یہ جمہوری فریضہ پارلیمنٹ کے بجائے الیکشن کمیشن کو ادا کرنا پڑا ، انہوں نے کہا کہ اب پورا ملک سب سے بڑے صوبے میں نگران سیٹ اپ کا معاملہ طے ہونے کا منتظر ہے جبکہ ن لیگی قیادت مختلف حیلوں بہانوں سے اس میں غیر ضروری اور ناواجب تاخیر روا رکھ رہی ہے – عزیز الرحمان چن اور راجہ عامر نے کہا کہ ن لیگی قیادت کا منفی رویہ شکوک و شبہات کو ہوا دے رہا ہے اور عام انتخابات میں تاخیر کے حوالہ سے غیر یقینی صورتحال عامی تشویش بڑھا رہی ہے – انہوں نے کہا کہ ن لیگ کو اہم قومی امور میں سنجیدگی کا مظاہرہ کرنا چاہئے اور ایسی غیر جمہوری روش ترک کر دینی چاہئے جس کے باعث کنفیوژن اور جنگ ہنسائی کی صورتحال پیدا ہو رہی ہے –

اپنا تبصرہ بھیجیں