سابقہ نا اہل حکومت نے 36ہزار نوکریاں پڑھے لکھے نوجونوں کو نہیں دیں،پیپلز پارٹی ان نوجوانوں کو یقین دلاتی ہے کہ انتخابات میں کامیابی کے بعد تمام بے روزگاروں کو روزگار فراہم کرینگے:حاجی علی مدد جتک

بلوچستان میں بے روزگاری میں اضافہ ہواہے ،4مئی کو کوئٹہ میں عظیم الشان جلسہ ہوگا ،بلاول بھٹو زرداری اور دیگر پارٹی کی مرکزی قیادت خطاب کرینگے ،پی پی پی بلوچستان کے صوبائی صدر کی پریس کانفرنس
30704149_840153889528365_4971270064952049664_n
کوئٹہ: پاکستان پیپلز پارٹی بلوچستان کے صوبائی صدر حاجی علی مدد جتک نے کہاہے کہ سابقہ نا اہل حکومت نے 36ہزار نوکریاں پڑھے لکھے نواجونوں کو نہیں دی جس سے بلوچستان میں بے روزگاری میں اضافہ ہوگیا ہے اور پڑھے لکھے نوجوان ڈگریاں ہاتھ میں لے کر درپدرہ کی ٹھوکریں کھاتے ہیں ،پیپلز پارٹی ان نوجوانوں کو یقین دلاتی ہے کہ انتخابات میں کامیابی کے بعد تمام بے روزگاروں کو روزگار فراہم کرینگے ،یہ حکومت کا فرض ہوگا اور ہماری ذمہ داری ہوگی ،یہ بات انہوں نے اتوار کے روز ممتاز قبائلی وسیاسی رہنماء میر شاہ نواز لہڑی ،عزیزاللہ لہڑی ،عبدالحنان لہڑی ،سلام جان لہڑی ،چیئرمین غلام حسین کی پیپلز پارٹی میں شمولیت کے موقع پر کوئٹہ پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہی ،اس موقع پر پیپلز پارٹی بلوچستان کے صوبائی جنرل سیکرٹری اقبال شاہ ،صوبائی سیکرٹری اطلاعات سردار سربلندخان جوگیزئی ،ثناء جتک اور پارٹی کے دیگر عہدیدار بھی موجود تھے ،حاجی علی مدد جتک نے کہاکہ 4مئی کو کوئٹہ میں عظیم الشان جلسہ ہوگا جس سے پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری اور دیگر پارٹی کی مرکزی قیادت خطاب کرینگے ،انہوں نے کہاکہ میں بلاول بھٹو اورپیپلز پارٹی بلوچستان کی جانب سے میر شاہنوا ز لہڑی اور انکے ساتھیوں کا پیپلز پارٹی میں شمولیت کا خیر مقدم کرتے ہیں اور انکو یقین دلاتے ہیں کہ انکی شمولیت سے پارٹی مزید مضبوط اور مستحکم ہوگی ہم بلوچستان کے عوام کو یقین دلاتے ہیں کہ وہ عام انتخابات میں ہمارا ساتھ دیں اور ہمیں ایوان اقتدار تک پہنچائے ہم صوبے سے بے روزگاری کاخاتمہ کرینگے اور انہیں مایوس نہیں کرینگے ،انہوں نے کہاکہ افسوس کی بات ہے کہ سابقہ حکومت قوم پرستوں کی حکومت تھی جس میں نواب ،سردار ،پشتون بلوچ قوم پرست شامل تھے ،36ہزار نوکریاں ہونے کے باوجود انہوں نے بے روزگاروں کو روزگار فراہم نہیں کی ہم عوام کو یقین دلاتے ہیں کہ برسراقتدا ر آکر بلوچستان کے عوام کے مسائل جن میں بے روزگاری کا خاتمہ ،صاف پانی اور صحت جیسی اہم ضروریات پوری کرینگے ،یہ ہر حکومت کا فرض بنتا ہے کہ برسراقتدار آنے کے بعد وہ عوام سے کئے ہوئے وعدے پور ے کریں ہم نے عوام کیساتھ جو وعدے کئے ہیں وہ ہمیشہ پورے کئے ہیں اور 2018ء کے الیکشن کے موقع پر جو وعدے کئے جارہے ہیں اسے ہر صورت میں پورا کیا جائیگا تاکہ بلوچستان سے پسماندگی کو دور کیا جائے گا اور احساس محرومی جو اس وقت بلوچستان کے عوام میں پائی جاتی ہے اسے ختم کیا جائیگا ۔
کیٹاگری میں : News

اپنا تبصرہ بھیجیں