توانائی بحران کی تمام تر ذمہ داری ڈال کر پیپلز پارٹی کو ٹارگٹ بنائے رکھنے والے اب ہونے والی قومی تاریخ کی بدترین لوڈ شیڈنگ کے عذاب اور عوام کے کرب پر کیوں خاموش ہیں ؟: راجہ عامر خان

RajaAmir1

پیپلز پارٹی پنجاب کے سیکرٹری اطلاعات راجہ عامر خان نے کہا ہے کہ ورثہ میں ملنے والے توانائی بحران کی تمام تر ذمہ داری ڈال کر پیپلز پارٹی کو ٹارگٹ بنائے رکھنے والے اب ہونے والی قومی تاریخ کی بدترین لوڈ شیڈنگ کے عذاب اور عوام کے کرب پر کیوں خاموش ہیں ؟ ۔پیپلز سیکرٹریٹ پنجاب میں مختلف وفود سے ملاقاتوں کے دوران انہو ں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کو توانائی بحران ورثے میں ملا تھا ، بدترین معاشی صورتحال اور سازشوں کے باوجود پیپلز پارٹی نے توانائی بحران ختم کرنے کے لئے مختصرالمدتی اور طویل المدتی منصوبے تیار کر کے ان پر عملدرآمد شروع کرایا جس کے مثبت اثرات ملنے میں تھوڑا عرصہ باقی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ شہید بھٹو کی میراث اور شہید بی بی محترمہ بینظیر بھٹو کے مشن کو آگے بڑھاتے ہوئے صدر آصف علی زرداری نے بڑی جرات مندی سے سامراجی دباؤ مسترد کرتے ہوئے پاک ایران گیس پائپ لائن معاہدہ کیا اور اس پر عملدرآمد بھی شروع کرایا۔ انہوں نے کہا کہ متعدد ہائیڈرل پروجیکٹس پر تیزی سے پیشرفت جاری ہے جبکہ پیپلز پارٹی ایٹمی بجلی گھروں کا منصوبہ بھی تیار کر چکی تھی ، انہو ں نے امید ظاہر کی کہ ملک و قوم کے مفاد اور مستقبل کے تقاضوں کے پیش نظر نئی منتخب جمہوری حکومت توانائی بحران سے نمٹنے کو اولین ترجیح دے گی ۔ انہو ں نے کہا کہ تمام محب وطن سیاسی ، جمہوری پارلیمانی قوتوں کو انتخابی رنجشیں ، باہمی اختلاف بالائے طاق رکھتے ہوئے اہم قومی مسائل کے حل اور تعمیر و ترقی کے لئے متحد ہو کر ٹھوس متفقہ حکمت عملی پر ڈٹ جانا ہو گا ۔ انہو ں نے کہا کہ پیپلز پارٹی مخالفت برائے مخالفت کی دیرینہ منفی روایت ختم کر کے مثبت تعمیری ، سنجیدہ ذمہ دار اور موثر اپوزیشن متعارف کرائے گی ۔ انہوں نے یقین دلایا کہ توانائی بحران کے خاتمہ کے لئے پیپلز پارٹی نئی منتخب حکومت سے بھرپور تعاون کرے گی ۔-

اپنا تبصرہ بھیجیں