پاکستان میں پرو طالبان قوتوں کو الیکشن جتوانا اور اقتدار دلوانا طے ہو چکا تھا: تنویر اشرف کائرہ

12-22-2010_7515_l_u

پاکستان پیپلز پارٹی پنجاب کے جنرل سیکرٹری تنویر اشرف کائرہ اور نائب صدر طارق گجر نے کہا ہے کہ 11 مئی 2013 کے عام انتخابات خصوصی طور پر ڈیزائین کئے گئے تھے اس لئے اس کے پہلے سے طے شدہ نتائج کے حوالے سے کسی بھی پارٹی کی کارکردگی یا عوامی مقبولیت کے حوالہ سے بے سرو پا پاتوں اور الزام تراشیو ں کا سلسلہ ختم ہو جانا چاہئے ۔ پیپلز سیکرٹریٹ پنجاب مختلف وفود سے بات چیت کرتے ہوئے انہو ں نے کہاکہ حالیہ عام انتخابات میں عالمی طاقتوں کے ملوث ہونے کے ٹھوس شواہد سامنے آ رہے ہیں خصوصا ” افغانستان سے امریکی و نیٹو فورسز کے انخلا کے حوالے سے محفوظ راستہ دینے کے عوض طالبان کی پیش کردہ شرط تسلیم کرتے ہوئے پاکستان میں پر و طالبان قوتوں کو الیکشن جتوانا اور اقتدار دلوانا طے ہو چکا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی نے اپنے پانچ سالہ عہد حکومت میں عوامی خدمات کی شاندار خدمات کی قابل قدر مثالیں رقم کیں ۔ بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کے ذریعے 75 لاکھ گھرانوں کے 5 کروڑ سے زائد مستحقین کی مالی اعانت ’ توانائی بحران ،سے نمٹنے کے لئے بھاشا دیامرڈیم اور پاک ایران گیس معاہدہ سمیت متعد د قلیل مدتی اور طویل المیعاد منصوبے شروع کئے گئے ، 1973 ء کے متفقہ آئین کو اصل صورت میں بحال کیا گیا ۔ سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 158فیصد اضافہ ، پنشن معاہدے ، روس سے تعلقات کی بحالی،علاقائی تعاون برائے ترقی کے فروغ اور خارجہ پالیسی کو جراتمندانہ خطوط پر استوار کر کے قومی امنگوں سے ہم آہنگ کرنے جیسے انقلابی اقدامات پیپلز پارٹی کے کریڈٹ پر ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ جمہوریت کے لئے اپنے قائدین کی جانوں کے نذرانے پیش کرنے والی پیپلز پارٹی نے جمہوری استحکام کے لئے انتخابی نتائج کو تسلیم کیا ہے اور نئی حکومت کے ساتھ تعاون کااعلان بھی اس حوالہ سے کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ معروضی حقائق اور ٹھوس شواہد منظر عام پر آنے کے بعد انتخابی ہار جیتکے حوالہ سے فضول بیان بازی اور الزامات کا سلسلہ ختم کر کے آگے بڑھنے کی ضرورت ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ پیپلز پارٹی اب بھی ملک کی سب سے بڑی اور مقبول عوامی جماعت ہے جو نئے عزم کے ساتھ عوامی خدمات کا تسلسل برقرار رکھے گی ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں