چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے پی ٹی آئی حکومت کے ان کرداروں کو متنبہ کیا ہے کہ وہ قائداعظم محمد علی جناح کے وژن سے انحراف کرنے سے باز آجائیں، جو پاکستان کو دو پاکستان کے نظریئے کی جانب دھکیل رہے ہیں

اسلام آباد / کراچی : پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے پی ٹی آئی حکومت کے ان کرداروں کو متنبہ کیا ہے کہ وہ قائداعظم محمد علی جناح کے وژن سے انحراف کرنے سے باز آجائیں، جو پاکستان کو دو پاکستان کے نظریئے کی جانب دھکیل رہے ہیں، اور یہ بہت بڑی ناانصافی کررہے ہیں۔ قائد اعظم محمد علی جناح کی برسی کے موقعے پر جاری کردہ اپنے پیغام میں پی پی پی چیئرمین نے بابائے قوم کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ نظریہِ پاکستان ملک کی بنیاد ہے اور پوری قوم کو اس بات کو یقینی بنانا ہوگا کہ کسی کو اس نظریئے سے پیچھے ہٹنے کی اجازت نہ ہو۔ انہوں نے کہا کہ قائداعظم نے سیاسی و جمہوری جدوجہد کے ذریعے مسلمانوں کے لئے ایک ایسا ملک قائم کیا، جہاں آزادی سے پہلے کی اُن امپیرئل حکومتوں کے برعکس سب قانون کے آگے برابر ہوں گے، وگرنہ اس سے پہلے ایک ملک میں کئی قانون ہوتے تھے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایک ملک اور دو قانون والا رجحان انتھائی خطرناک ہے، جس کو ایک بار پھر ذاتی اور سیاسی مفادات کی خاطر تقویت دی جا رہی ہے۔ پی پی پی چیئرمین نے نشاندہی کرتے ہوئے کہا کہ سابق وزرائے اعظم شہید ذوالفقار علی بھٹو اور شہید محترمہ بینظیر بھٹو نے نظریہ پاکستان اور اس کو مضبوط بنانے کے لئے جدوجہد کی اور اس کی خاطر ملک کو پہلا متفقہ آئین، دفاع، مستحکم معاشی ڈھانچہ، سماجی شعبے میں اصلاحات اور عوام کو بااختیار بنایا۔ بلاول بھٹو زرداری نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ ان کی پارٹی قائداعظم محمد علی جناح کے وژن و نظریئے کی علمبردار بنی رہے گی اور جب بھی اسے روندنے کی کوشش کی جائے گی وہ اس کے خلاف ہونے والی مزاحمت کی پہلی صف میں رہے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں