PPP Government wants to give right to voters living abroad: Chairman Bilawal Bhutto Zardari


New York, Sep. 30 (APP): PPP Chairman Bilawal Bhutto has assured that Pakistan Peoples Party wants to give right of vote to oversees Pakistanis.
Addressing a convention of the PPP USA here on Saturday night, Bilawal said, “The PPP has always, and will always, stand by our oversees Pakistanis and committed to ensuring your right to vote in elections.”
He said “ We are committed to the idea that dual-nationals should be able to participate in all our country’s civic matters, and that includes the right to contest elections.”Bilawal said no unelected people have the right to question the loyalty of anyone, elected by the people of Pakistan. “You must have your voices heard in the next election,” he told the party workers.
The Chairman PPP said, “If they don’t let you run, if they don’t let you vote, speak to your family and friends in Pakistan, come back to Pakistan yourselves, and support the Party that has not given up on your voice and your vote.”The Chairman said he is proud that his Party is transforming Pakistan and building its future.

پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پاکستان کی عدلیہ نے انصاف کی فراہمی میں دوہرا معیار اپنا رکھا ہے ۔اگر عدلیہ اصلاحات نہیں کرے گی تو پاکستان کے عوام عدلیہ میں اصلاحات لائیں گے ،ہم آزاد اور غیر جانبدار عدلیہ پر یقین رکھتے ہیں،جبکہ بلوچستان میں چیلنجوں سے نمٹنے کے لیے تاریخی اقدامات کیے گئے ہیں۔انہوں نے یہ بات امریکی شہر نیو یارک میں پارٹی کنونشن سے خطاب میں کہی، بلاول بھٹو زرداری نے چیف جسٹس افتخار محمد کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ اپنے بیٹے کے مقدمے کی تحقیقات کا ایک طریقہ جبکہ دوسروں کے مقدمات کے لیے الگ طریقہ اپنا رکھا ہے ۔انہوں نے خبردار کیا کہ اگر عدلیہ اصلاحات نہیں کرے گی تو پاکستان کے عوام عدلیہ میں اصلاحات لائیں گے ۔ہم آزاد اور غیر جانبدار عدلیہ پر یقین رکھتے ہیں۔دہشت گردی کے خلاف جاری جنگ کے حوالے سے پیپلز پارٹی کے سربراہ کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی کی حکومت یہ جنگ اپنی شرائط پر جاری رکھے ہوئے ہیں۔بلوچستان میں لوگ گم ہو رہے ہیں۔ ماؤں کو لاشیں مل رہی ہیں۔ ہم بلوچستان کو لہولہان نہیں رہنے دیں گے ۔ پیپلز پارٹی بلوچ عوام کو پاکستان میں برابر کا شریک سمجھتی ہے ۔ بلوچستان میں چیلنجوں سے نمٹنے کے لیے تاریخی اقدامات کیے گئے ہیں۔ این ایف سی ایوارڈ کے ذریعے بلوچستان کا حصہ دوگنا کردیاگیا ہے ۔بلاول کا کہنا تھا کہ ‘ایک فوجی آمر نے بلوچستان کو ریاست کا دشمن بنا دیا،پرویز مشرف کے دورِ حکومت میں لوگوں کو ملک بدر کرنا صحیح نہیں تھا۔پیپلز پارٹی نے مشرف دور کے غیر آئینی اقدامات سے ملک کو پاک کیا۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں آزاد الیکشن کمیشن کا قیام پیپلز پارٹی کا بڑا کارنامہ ہے ۔انکی حکومت نے جمہوری اقدار کا فروغ یقینی بنایا۔ انہوں نے گستاخانہ فلم کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایسے اقدامات کا سلسلہ فوراً بند ہونا چاہیے ، گستاخانہ فلم کے خلاف پرامن احتجاج کرنے والے ہی اسلام کے حقیقی پیروکار ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کوئی غیر منتخب شخص بیرون ملک مقیم پاکستانیوں اور منتخب نمائندوں کی حب الوطنی پر شک کرنے کا مجاز نہیں، کوشش ہے کہ دہری شہریت رکھنے والے پاکستانی ملکی امور میں شامل رہیں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں