Mian Manzoor Ahmed Wattoo welcomes LHCBA declaration‏

10669998_675754605864697_1205422549874757880_n
Mian Manzoor Ahmed Wattoo, President Punjab PPP, welcomed the declaration of the Lahore High Court Bar Association in Lahore yesterday in which it was earnestly urged that the Pakistan Tehrik-i-Insaf, Pakistan Awami Tehrik and the Government should get together and resolve the current political crisis before Eid-ul-Azha.
He observed that if they resolved the political stalemate it would multiply the happiness of the Muslims of Pakistan and indeed others as well because its continuation would prevent them to celebrate the Eid with traditional religious fervor.
Mian Manzoor Ahmed Wattoo also welcomed the imitative of the LAHCBA to arrange All Parties’ Conference in Lahore with a view to hold open discussions on national issues facing the country aimed at of evolving consensus.
He said that the LHCBA was the biggest lawyers’ forum of Asia and its deliberations would definitely have positive impact on the country’s politics which was now struck with no clarity in sight.
He said that the declaration of the LHCBA was very reassuring for the upholding the cause of the constitution, continuity of democracy and the supremacy of the law because almost all the political leadership expressed their unwavering support for these cherished causes.
They were indeed unanimous in their conviction that they would not only oppose but also resist if extra-constitutional measures were taken to bring political change in the country
Mian Manzoor Ahmed Wattoo highly appreciated the role of the lawyers’ community for the independence of Judiciary in particular adding that their commitment to the rule of law was the enviable guarantee for the continuity of the political system in the country.
Mian Manzoor Ahmed Wattoo said that the PPP was represented in the APC and was fully in agreement with the declaration of the Lahore High Court Bar Association because the Party’s struggle had always been for the attainment of these higher national objectives those represented the aspirations of the people.
He said that the lawyers’ community spearheaded the campaign along with the PPP for the empowerment of the poor masses who had been deprived of political justice and fundamental rights during dictatorships in particular.

پاکستان پیپلز پارٹی پنجاب کے صدر میاں منظور احمد وٹو لاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے کل کے اعلان کا خیر مقدم کیا جسمیں کہا گیا ہے کہ حکومت، پاکستان تحریک انصاف اور پاکستان عوامی تحریک عید سے پہلے موجودہ سیاسی بحران کو حل کریں۔ میاں منظور احمد وٹو نے آج یہاں سے جاری ایک بیان میں کہا کہ اگر عید سے پہلے موجودہ سیاسی بحران حل ہو جائے تو یہ ایک عید کا بہترین تحفہ ہو گا جس سے قوم کی خوشیاں دوبالا ہو جائیں گی۔ میاں منظور احمد وٹو نے لاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کی آل پارٹیز کانفرنس کے اقدام کو سراہتے ہوئے کہا کہ اس سے قومی ایشوز پر اتفاق رائے پیدا کرنے میں بڑی مدد ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ لاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن ایشیاء کا سب سے بڑا لائرز فورم ہے اور اس کی سفارشات کا ملکی سیاست پر مثبت اثر ضرور پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ لاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کا اعلان ملک میں جمہوریت کے تسلسل، آئین کی بالادستی اور قانون کی عملداری کے لیے بڑی اہمیت کا حامل ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ تقریباً تمام سیاسی پارٹیوں کے قائدین نے اس بات کا اعادہ کیا کہ وہ غیر جمہوری طریقے سے سیاسی تبدیلی کی نہ صرف مخالفت کریں گے بلکہ اسکی مزاحمت بھی کریں گے جو پاکستان کے جمہوری مستقبل کے لیے فیصلہ کن حیثیت حاصل ہو گی۔ میاں منظور احمد وٹو نے وکلاء کے کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ انہوں نے سول سوسائٹی کے ساتھ ملکر عدلیہ کی آزادی کے لیے تاریخی کردار ادا کیا۔ آزاد عدلیہ عوام کے حقوق کی ضامن ہوتی ہے۔میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے آل پارٹیز کانفرنس میں شرکت کر کے یہ پیغام دیا ہے کہ وہ اس کے ایجنڈے سے پورا پورا اتفاق کرتی ہے اور ان اعلیٰ مقاصد کے حصول کے لیے جدوجہد کرتی رہے گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ پیپلز پارٹی نے وکلاء برادری کے ساتھ ملکر عوام کے حقوق کی کامیاب جنگ لڑی ہے۔

کیٹاگری میں : News

اپنا تبصرہ بھیجیں