دیپالپور:منظور وٹو کے دفتر پر پولیس کا چھاپہ ،جشن منانے والے جیالوں پر تشدد


دیپالپور(آن لائن)پولیس نے وفاقی وزیر میا ں منظور وٹو کے دفتر پر چھاپہ مار کرپارٹی صوبائی صدر بننے کی خوشی میں جشن منانے والے جیالوں پر تشدد کیا
جس سے تین زخمی ہوگئے جبکہ پانچ کو گرفتار کر لیا گیا ۔تفصیلات کے مطابق منظور وٹو کو پیپلزپارٹی وسطی پنجاب کا صدر بنائے جانے کی خوشی میں لوگ ان کے مرکزی دفتر پہنچ گئے اور جشن مناتے ہوئے ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑے ڈالنے شروع کر دیئے ، اور پارٹی دفتر کی چھت پر آتش بازی کا مظاہرہ کیا گیا جس پر پولیس کی بھاری نفری وفاقی وزیر کے دفتر میں داخل ہوئی ، آتش بازی کا سامان قبضے میں لیتے ہوئے کارکنان پر تشدد کیا جس سے تین افراد زخمی ہو گئے پانچ کو گرفتار کر لیا گیا تاہم بعد ازاں سیاسی مداخلت پر گرفتار شدگان کو رہا کردیا گیا ۔ علاوہ ازیں منظور وٹو نے ٹیلیفون پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پولیس نے صوبائی حکومت کی ہدایت پر پر پویس گردی کا مظاہرہ کیا جو بدترین فعل ہے ، گھناؤنے اقدام میں ملوث پولیس اہلکاران کو معطل کر کے کارروائی کی جائے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں