حکومت انتہا پسندی کے خاتمہ کیلئے اقدامات کررہی ہے :صدر زرداری

صدر مملکت آصف علی زردادری نے کہا ہے کہ حکومت ملک سے دہشتگردی اور انتہا پسندی کے خاتمہ کے لئے ہر ممکن اقدامات کررہی ہے ۔ ملک میں قیام امن اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی کارکردگی کو بہتر بنانے کے لئے وفاقی حکومت ہر ممکن وسائل فراہم کرے گی۔ سندھ حکومت سیلاب سے متاثرہ علاقوں کے متاثرین کو فوری طور پر کمبل اور خیمے فراہم کرنے کے اقدامات کرے ۔ وہ صدارتی کیمپ آفس بلاول ہاؤس کراچی میں گورنر سندھ ڈاکٹر عشرت العباد خان اور وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ سے ملاقات اور قبل ازیں وفاقی وزیر داخلہ رحمان ملک سے ٹیلی فون پر گفتگو کررہے تھے ۔ گورنر اور وزیراعلیٰ سندھ نے صدر کو سیاسی صورتحال، یوم عاشور کے موقع پر صوبہ میں کئے گئے سکیورٹی کے اقدامات، کراچی میں قیام امن اور ترقیاتی منصوبوں سے آگاہ کیا۔ صدر نے کہا کہ موجودہ جمہوری حکومت اپنی مدت پوری کررہی ہے ۔ یہ عوام کی فتح ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ انتخابات شفاف طور پر مقررہ وقت پر منعقد کرائیں جائیں گے اور جو جماعت انتخابات میں کامیاب ہوگی اسے آئینی طریقے سے اقتدار منتقل کیا جائے گا۔ صدر مملکت نے کہا کہ ملک کو درپیش چیلنجز سے نمٹنے کے لئے سیاسی قوتوں سے ڈائیلاگ کے سلسلے کو بھی جاری رکھا جائے گا۔ صدر مملکت نے یوم عاشور کے موقع پر کراچی سمیت صوبہ بھر میں سندھ حکومت کی جانب سے سیکورٹی کے کئے گئے اقدامات کو سراہا۔ اس موقع پر انہوں نے سندھ حکومت کو ہدایت کی کہ موسم سرما کا صوبہ میں آغاز ہوچکا ہے اس لئے صوبائی حکومت صوبہ میں سیلاب سے متاثرہ افراد کو فوری طورپر ایک لاکھ کمبل اور رضائیاں اور 50 ہزار خیمے فراہم کرنے کے لئے اقدامات کرے ۔ ذرائع کے مطابق قبل ازیں صدر آصف علی زرداری نے وفاقی وزیر داخلہ رحمان ملک سے ٹیلی فون پر بات کی ۔ صدر مملکت نے اس موقع پر رحمان ملک سے ڈی آئی خان اور راولپنڈی میں ہونے والے واقعات کی تفصیلی رپورٹ طلب کی ہے ۔صدر نے امن و امان کے حوالے سے اہم اجلاس بلاول ہاؤس میں طلب کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں