آصف علی زرداری کے تدبر اور دور اندیشی کی وجہ سے جمہوریت سرخرو ہوئی ہے: میاں منظور احمد وٹو

DSC_0825

پیپلز پارٹی پنجاب کے صدر میاں منظور احمد وٹو نے آج یہاں بلاول ہاؤس لاہور کے باہر میڈیا سے باتیں کرتے ہوئے کہا کہ پیپلزپارٹی جمہوریت کو بچانے کے لیے ایجی ٹیشن کی سیاست میں شامل اس لیے نہیں ہوئی تا کہ غیر جمہوری قوتوں کا راستہ روکا جائے، اگر پیپلزپارٹی ایسا نہ کرتی تو امپائر نے سیٹی بجا دینی تھی۔ انہوں نے کہا کہ سابق صدر آصف علی زرداری کے تدبر اور دور اندیشی کی وجہ سے جمہوریت سرخرو ہوئی ہے اور جمہوریت ہی بہترین انتقام ہے۔ میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ اب جمہوریت کو خطرہ ٹل گیا ہے اس لیے پیپلزپارٹی ایک بھر پور اپوزیشن پارٹی کا کردار ادا کرے گی۔ میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ 30 نومبر کے بعد عمران خان کا ٹیمپو قائم نہیں رہے گا کیونکہ 30 نومبر انکی مہم کی کلائیمکس ہے اور یہ فطری بات ہے کہ کلائمیکس کے بعد زوال شروع ہو جاتا ہے۔ میاں منظور احمد وٹو نے حکومت پنجاب کے بعض ناعاقبت اندیش اہلکاروں کی مذمت کی جسمیں انہوں نے مال روڈ پر پیپلز پارٹی کے فلیکسز پر اپنے فلیکسز لگا دےئے تھے تا کہ پیپلزپارٹی کے یوم تاسیس کی پبلسٹی کو نقصان پہنچایا جائے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت اس کا نوٹس لے اور جنہوں نے یہ کام ہے انکے خلاف ایکشن لے۔ میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ حکومت پنجاب کے چیف سیکریٹر ی اور ہوم سیکریٹری نے یقین دلایا تھا کہ حکومت پیپلزپارٹی کے یوم تاسیس کی پبلسٹی مہم کے راستے میں کوئی رکاوٹ نہیں ڈالے گی۔میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ اس دفعہ لاہور میں پیپلز پارٹی کا یوم تاسیس (وکھری ٹائپ کا ہوگا)۔ انہوں نے کہا کہ لاہور شہر کے علاوہ پورے پنجاب کے اضلاع میں یوم تاسیس کی پبلسٹی مہم زوروشور سے جاری ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ کارکن اس مہم کو کامیاب بنانے کے لیے پرعزم ہیں۔انکے ساتھ تنویر اشرف کائرہ سیکریٹری جنرل پیپلزپارٹی پنجاب اور دوسرے عہدیداران اور کارکنان موجود تھے ۔

کیٹاگری میں : News

اپنا تبصرہ بھیجیں